menu close
    press releases
    July 24, 2020

    کورونا کے مریضوں کی بہتر دیکھ بھال کیلئے داؤد فاؤنڈیشن اور آغاخان یونیورسٹی کے مابین اشتراک!

    کراچی: داؤد ہرکولیس گروپ کی چیریٹی کمپنی داؤد فاؤنڈیشن نے ملک میں کورونا (COVID-19)کے مریضوں کی دیکھ بھال کیلئے فرنٹ لائن ہیلتھ کیئر پروفیشنلز کی صلاحیتوں کو بڑھانے کیلئے آغا خان یونیورسٹی ہسپتال کے ساتھ باہمی تعاون کے منصوبے کا اعلان کیا ہے

    ملک میں کورونا کے کیسز میں اضافہ کے ساتھ پاکستان بھر میں ہسپتال کرونا کے مریضوں کے علاج کیلئے اپنی خدمات مختص کررہے ہیں اور انتہائی نگہداشت کے یونٹس تک کورونا کے مریضوں کے علاج کیلئے مصروفِ عمل ہیں۔ان خدمات کی فراہمی کیلئے مخصوص شعبوں کے ہیلتھ کیئر ورکرز کو متحرک کیا جارہا ہے اور انہیں کورونا کے مریضوں کے ساتھ کام کرنے کی تربیت دی جارہی ہے۔

    کمپنی سے جاری پریس ریلیز کے مطابق2مرحلوں پر مشتمل اس منصوبے کیلئے منسٹری آف نیشنل ہیلتھ سروسز، ریگولیشن اینڈ کورآرڈینیشن کے تعاون سے داؤد فاؤنڈیشن 79.5ملین روپے کی امداد فراہم کرے گی۔ پہلے مرحلے میں 5000ڈاکٹرز، نرسز اور پیرامیڈیکل اسٹاف کوکورونا کے درمیانے اور سیریس مریضوں کی دیکھ بھال کیلئے آن لائن تربیت فراہم کی جائے گی۔ دوسرے مرحلے میں آغاخان ہسپتال 500ہیلتھ کیئر پروفیشنلز کوکووِڈ 19اور اسکے اثرات سے بچاؤ کیلئے ان کے اداروں کی صلاحیت بہتر بنانے کیلئے سائیٹ پر عملی تربیت فراہم کرے گی۔

    اس شراکت داری کے ذریعے آغا خان یونیورسٹی مختلف ہسپتالوں میں داخل 16ہزار سے زائد مریضوں کے بہتر علاج کیلئے ہیلتھ کیئر پروفیشنلزکو ٹیلی کنسلٹیشن کی خدمات بھی فراہم کرے گی۔

    اس موقع پرداؤد فاؤنڈیشن کی چیف ایگزیکٹو آفیسر سبرینا داؤد نے کہا کہ ہمیں اس منفرد اور پائیدار پروگرام کیلئے آغا خان ہسپتال کے ساتھ شراکت داری پر خوشی ہورہی ہے۔یہ شراکت داری ملک بھر میں معیارِ زندگی کو بہتر بنانے میں مدد فراہم کرے گی۔ کووِڈ 19 ہیلتھ نیٹ ورک کی تشکیل اور ملک کے پسماندہ علاقوں میں ٹیلی کنسٹلیشن سروسز فراہم کرنے سے اس منصوبے سے قومی سطح پر ممکنہ طورپر انتہائی نگہداشت میں بہتر ی لائی جاسکتی ہے۔

    داؤد فاؤنڈیشن بھی اینگرو کارپوریشن اور داؤد کارپوریشن کے چیئرمین حسین داؤد کے اس عہد کا حصہ ہے جس کے تحت انہوں نے کرونا کے خلاف لڑنے کیلئے ایک ارب روپے کی امداد فراہم کرنے کا اعلان کیا تھا۔

    اس عہدکے تحت کووِڈ19کی روک تھام کیلئے 4مرکزی شعبوں میں امدادی کاموں میں توسیع دی جارہی ہے جن میں اس وبا کے خلاف جنگ لڑنے والے ڈاکٹرز اور دیگر طبی عملے کی حفاطت، مریضوں کی دیکھ بھال اور ان کو فراہم کی جانے والی سہولیات کو یقینی بنانے اورمعاشرے کے سب مستحق افراد تک ضروریاتِ زندگی کی فراہمی شامل ہیں۔

    اس موقع پر آغا خان میڈیکل کالج کے ڈین ڈاکٹر عادل حیدر نے کہاکہ جب ملک کو ضرورت ہوتو اپنی خدمات کی فراہمی کو ہم فرض سمجھتے ہیں اور ہمارا شمار بھی مشکل وقت میں موجود لوگوں میں سے ہوں۔ اس شراکت داری سے ہیلتھ ورکرز کو ہسپتال میں داخل کووِ ڈ 19کے مریضوں کے علاج کیلئے درکارجدید نالج اور مہارت فراہم کی جائے گی۔

    آغا خان یونیورسٹی پہلے ہی وزارتِ صحت اور بل اینڈ ملینڈا گیٹس فاؤنڈیشن کے تعاون سے ہیلتھ کیئر ورکرز کو کووِڈ 19کے سخت بیمار مریضوں کے علاج کیلئے مفت ٹیلی کنسٹلیشن سروسز فراہم کررہی ہے۔ اس معاہدے کے ذریعے آغاخان یونیورسٹی ہسپتالوں میں داخل درمیانے اور سیریس مریضوں کی مکمل دیکھ بھال کیلئے ٹیلی کنسلٹیشن مفت فراہم کرے گی۔ آغاخان یونیورسٹی نگہداشت کی میڈیسن کے اہم پہلوؤں پرحکومتِ سندھ کے اشتراک سے فرنٹ لائن ہیلتھ ورکرز کیلئے متعدد کورسز کا بھی انعقاد کررہی ہے۔